Blog

Meri Dua Se Woh Pathar Pighal Bhi Sakta Tha By Mohsin Naqvi

Meri Dua Se Woh Pathar Pighal Bhi Sakta Tha By Mohsin Naqvi
Meri Dua Se Woh Pathar Pighal Bhi Sakta Tha By Mohsin Naqvi

 




مری دعا سے وہ
پتھر بگھل بھی سکتا تھا

اُداسیوں کا یہ موسم بدل بھی سکتا تھا

وہ چاہتا، تو میرے ساتھ چل بھی سکتا تھا

وہ شخص تو نے جسے چھوڑنے میں جلدی کی

ترے مزاج کے سانچے میں ڈھل بھی سکتا تھا

وہ جلد باز خفا ہو کے چل دیا ورنہ

تنازعات کا کچھ حل نکل بھی سکتا تھا

انا نے ہاتھ اُٹھانے نہیں دیے ورنہ

مری دعا سے وہ پتھر پگھل بھی سکتا تھا

تمام عُمر ترا منتظر رہا محسنؔ

یہ اور بات وہ رستہ بدل بھی سکتا تھا

 

محسن نقویؔ

 

 

Uddasioon ka yeh mousam bada lbhi sakta tha

Woh chahta tu mere saath chal bhi sakta tha

Woh shaks tu ne jisey chorney mein jaldi ki

Tere mizaj k sanchey mein dhal bhi sakta tha

Woh jald baaz khafa ho k chal diya warna

Tanazat ka kuch hal nikal bhi sakta tha

Ana ne haath uthaney nahi diye warna

Meri dua se woh pathar pighal bhi sakta tha

Tamam umer tera muntazir rha “mohsin”

Yeh aor baat, woh rasta badal bhi sakta tha

 

 

MOHSIN NAQVI


FOR MORE

Related Articles

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker