Blog

Sakoot-e-Sham Ka Hisa Tu Mat Bana Mujh Ko Ali Zaryoun Urdu Hindi Poetry

 

Sakoot e Sham Ka Hisa Tu Mat Bana Mujh Ko

In Urdu





 سکوت شام کا حصہ تو مت بنا مجھ کو

میں رنگ ہوں سو کسی موج سے ملا مجھ کو

میں ان دنوں تیری آنکھوں کے اختیار میں ہوں 

جمال سبز! کسی تجربے میں لا مجھ کو 

میں بوڑھے جسم کی ذلت اٹھا نہیں سکتا 

کسی قدیم تجلی سے کر نیا مجھ کو 

میں اپنے ہونے کی تکمیل چاہتا ہو سخی 

سو اب بدن کی حراست سے کر رہا مجھ کو

مجھے چراغ کی حیرت بھی ہو چکی معلوم

اب اس سے آگے کوئی راستہ دکھا مجھ کو 

اس اسم خاص کی ترکیب سے بنا ہوں میں

محبتوں کے تلفظ سے کر نیا مجھ کو

سفید پانیوں والے رحیم لہجے میں 

ذرا وہ آ یہ آ غاز تو سنا مجھ کو

درون سینہ جسے دل سمجھ رہا تھا علی 

وہ نیلی آگ ہے یہ اب پتا چلا مجھ کو

Urdu In  English


Sakoot e Sham Ka Hisa Tu Maat Bana Mujh Ko

Main Rang Hun So Kisi Maug Se Mila Mujh Ko 

Main En Dinun Teri Ankhun Ke Ikhtyar Main Hun

Jamal e Sabaz! Kisi Tajarbe Main La Mujh Ko 

Main Bhure Jisam Ki Zilat Utha Nahi Sakta 

Kisi Kadeem Tajali Se Kar Naya Mujh Ko 

Main Apne Hone Ki taqmeel Chahta Hun Sakhi 

So Ab Badan Ki Harasat Se Kar Raha Mujh Ko 

Mujhe Charag Ki Hairat Bhi Ho Chuki Maloom 

Ab es Se Agy Koi Rasta Dekha Mjh Ko

Es Isam Khas Ki Tarqeeb Se Bana Hun Main 

Muhabatun Ke Talafaz Se Kar Naya Mujh Ko 

Sufaid Paniun Wale Raheem Lahgey Main 

Zara Wo Aya Agaz Tu Suna Mujh Ko 

Daroon e Seena Jise Dil Samjh Raha Tha Ali

Wo Neeli Agg Ha Ye Ab Pata Chala Mujh Ko

 

Credit:IBN E INSHA 

Related Articles

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker