Blog

Sad Poetry For Girls In Urdu 2021

کچھ دن بہت خوش رہا تھا میں

-اب اس خوشی کا قرض ر رہا ہوں

Kuch Din Bhut Khush Raha Tha Main 

Ab Es Khushi Ka karz Utar Raha Hun

سب ایک جیسے ہوتے ہیں

بس ڈسنے کا طریقہ مختلف ہوتا ہے

Sab Aik Jaise Hotey Hain

Bas Dasne Ka Tarika Mukhtalif Hota Ha



تجھ کو ہو میرے ساتھ کی خواہش شدید تر

اور پھر مجھ سے عمر بھر تیرا سامنا نہ ہو


Tujh Ko Ho Mere Sath Ki KHawahish Shadid Tar 

Aur Phir Mujh Se Umar Bhar Tera Samna Na Ho

جہاں انسان کے صبر کی حد ختم ہونے لگتی ہے بس وہی رب فرماتا ہے

“کن” ہرنا ممکن پھر ممکن ہو جاتی ہے

Jahan Insan Ke Sabar Ki Haad Khatam Hone Laghti Ha Bus Rab Farmata Ha

“Kun” Har Namumkin Phir Mumkin Ho Jati Ha

میری چپ سب کو کھائے جا رہی ہے

میں گھر میں سب سے زیادہ بھولنے والی لڑکی تھی

Meri ChUp Sab Ko Khaye Ja Rahi Ha 

Main Ghar Ma Sab Se Zyada Bolne Wali Larki Thi

عجیب حالت ہے میری

نا خوش ہوں نہ اداس ہوں

بس خاموش ہوں۔

Ajeeb Halat Ha Meri Na Khush Hun Na Udas Hun 

Bus Khamosh Hun-

یار وہ نصیبوں کی ہاری ہوئی لڑکی

رنگ حنا کا دیکھ کے ہنس پڑتی ہے

Yar Wo Nasibun Ki Hari Hoi Larki 

Rang Hina Ka Dekh Ke Hans Parti Ha.

تو اتنا کر ہی نہیں سکتا تھا مجھکو

جتنا برباد کیا ہے میں نے خود کو

Tun Itna Kar He Nahi Sakta Tha Mujhko 

Jitna Barbaad Kia Ha Main Ne Khud Ko

Thi Bhi Tu Kia Thi KHawahish Meri

Kah Wo Ho Tu Mera Ho”

تھی بھی تو کیا تھی خواہش میری

کہ وہ ہو تو صرف میرا ہو”


Related Articles

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker